کورونا کیسوں میں اضافہ ، پبلک ٹرانسپورٹ ، میٹرو اور اورنج لائن ٹرینوں کو بند کرنے کا فیصلہ حکومت پنجاب نے 12 شرح والے علاقوں میں لاک 43

کورونا کیسوں میں اضافہ ، پبلک ٹرانسپورٹ ، میٹرو اور اورنج لائن ٹرینوں کو بند کرنے کا فیصلہ

کورونا کیسوں میں اضافہ ، پبلک ٹرانسپورٹ ، میٹرو اور اورنج لائن ٹرینوں کو بند کرنے کا فیصلہ

لاہور: حکومت پنجاب نے 12 شرح والے علاقوں میں لاک ڈاؤن کی منظوری دے دی ، لاہور میں پبلک ٹرانسپورٹ ، میٹرو اور اورنج لائن ٹرین کو یکم اپریل سے بند رکھنے کا فیصلہ کیا گیا ، تفصیلات کے مطابق میڈیا ذرائع کا کہنا ہے کہ پنجاب کی زیرصدارت اجلاس میں اہم فیصلے کیے گئے وزیراعلیٰ عثمان بزدار ، جس کے تحت شام 6 بجے پنجاب میں مارکیٹیں بند رکھنے کا فیصلہ کیا گیا ، صرف ریستوراں اور پارکس مکمل طور پر بند ہوں گے۔ ٹیک ویز کی اجازت ہوگی ، جبکہ لاہور میں ٹرانسپورٹ بھی بند رکھنے کا فیصلہ کیا گیا ہے اور ماسک کا استعمال بھی لازمی کردیا گیا ہے۔ اس کے علاوہ پنجاب حکومت نے شادی کی تقریبات پر پابندی عائد کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

بتایا گیا کہ پابندیوں کا اطلاق ان شہروں پر ہوگا جن میں 12٪ سے زیادہ کورونا مثبت معاملات ہیں۔ کابینہ کمیٹی نے این سی او سی کے فیصلوں کو سختی سے نافذ کرنے کی حکمت عملی کی بھی منظوری دی۔ مائکرو اسمارٹ لاک ڈاؤن کی پالیسی اپنائی جائے گی۔ ماسک پر سختی سے ممانعت ہوگی۔

یاد رہے کہ پاکستان میں لگاتار تیسرے دن بھی 4000 سے زائد نئے کیسز سامنے آئے ہیں جس کے ساتھ ہی ملک میں مثبت کورونا کی شرح 11.2٪ کی ریکارڈ ترین اونچائی تک پہنچ گئی ہے۔

سوات میں مثبت کورونا کی شرح 23٪ اور سب سے زیادہ تھی۔ مزید کیسز پشاور میں پائے گئے ، جبکہ کورونا میں مثبت کیسز 22٪ ، مالاکنڈ ، سرگودھا اور سیالکوٹ میں 12٪ مثبت واقعات ہوئے۔

نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشنز سنٹر (این سی او سی) کے جاری کردہ سرکاری اعداد و شمار کے مطابق ، گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک بھر میں 4،525 افراد میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوگئی ہے ، جس کے بعد اب ملک میں کورونائ کے تصدیق شدہ مریض ہیں۔ مریضوں کی کل تعداد 659،116 تک جا پہنچی ہے جبکہ اس وقت فعال مریضوں کی تعداد 46،663 ہے جن میں سے 3،055 کی حالت تشویشناک ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں